تحریک کربلاء کا اہم ترین درس دفاع اسلام اور ظلم کی مخالفت ہے :مرکزی صدر

تحریک کربلاء کا اہم ترین درس دفاع اسلام اور ظلم کی مخالفت ہے :مرکزی صدر

تحریک کربلاء کا اہم ترین درس دفاع اسلام اور ظلم کی مخالفت ہے :مرکزی صدر آئی ایس او پاکستان 
لاہور(پ ر)آئی ایس او پاکستان کے مرکزی صدر برادر سرفراز  نقوی نے چہلم امام حسین کے موقع پر جلوس عزاء سے خصوصی خطاب کرتے ہوئے کہا کہ امام حسین کا غم اور ماتم کسی ایک علاقے تک محدود نہیں ہے بلکہ پاکستان کی سرزمین پر بھی ہے، عراق کی سرزمین پر بھی ہے ایران کی سرزمین پر بھی ہے بلکہ پوری دنیا میں ہر خطے میں امام حسین کا غم منایا جاتا ہے کیونکہ امام حسین انسانیت کے محسن ہیں اربعین امام حسین کے موقع پر کربلاء کی سرزمین پر عوام کا جوش و خروش درحقیقت اسلام کے حقیقی چہرہ کو مسخ کرنے والی قوتوں کی شکست ہے چہلم کا یہ عدیم المثال اجتماع جس میں تمام مسلمان بلاتفریق شرکت کرتے ہیں، امت مسلمہ کے درمیان اتحاد و یکجہتی کو مضبوط بنانے کا ذریعہ بنے گا۔۔ انہوں نے کہا کہ تحریک کربلا کے دو عظیم درس ہیں، پہلا درس اسلام کا دفاع ہے ور دوسرا درس ظلم کے خلاف اٹھنا ہے، وہ ظلم چاہے فلسطین کی سرزمین پر ہو وہ ظلم چاہے عراق کی سرزمین پر ہو وہ ظلم چاہے نائجیریا کی سرزمین پر ہو یا دنیا کے کسی بھی کونے میں ہو ہم ہر ظلم کے خلاف ہیں۔مرکزی صدر کا کہنا تھا یمن میں آل سعود نے تقدس و حرم کعبہ کی آڑ میں مظلوم مسلمانوں کا قتل عام کیا ہے ہم ہر ظلم کے مخالف ہیں ڈی آئی خان ،پشاور کوئٹہ اورکراچی میں مکتب تشیع کی ٹارگٹ کی جارہی ہے لیکن مکتب تشیع نے پاکستان میں ہمیشہ امن اور اتحاد بین المسلمین کو فروغ دیا ۔

Share this post

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے